لاہور (streamhours) پیپلز پارٹی کے رہنما بیرسٹر اعتزاز احسن نے کہا ہے کہ گوجرانوالہ کا جلسہ بڑا تھا اور یہ بات تسلیم کرنی چاہئے ۔ پروگرام 92 ایٹ 8 میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ 11جماعتوں نے اس میں اپنا اپنا حصہ ڈالا تھا۔ان میں پاکستان کی دو بڑی جماعتیں پیپلز پارٹی اور ن لیگ بھی شامل تھی۔


جلسہ بڑا ہونا کوئی حیرت کی بات نہیں ۔اس جلسے سے نکلتا کیا ہے یہ آگے چل کر پتہ چلے گا،۔ دیکھنا یہ ہے کہ نوازشریف اپنے بیانیے پر قائم رہتے ہیں یا نہیں، میں نوازشریف کے ماضی سے سخت مایوس ہوں۔یہ وہی نوازشریف ہیں جو ضیا الحق کے دور میں وزیر اعلیٰ بنے تھے ۔گوجرانوالہ جلسے میں احسن اقبال، شاہد خاقان عباسی، خواجہ آصف، جاوید ہاشمی ، نوازشریف، مریم نواز سب نے تقاریر کیں مگر بلاول بھٹو زرداری نے ہی کشمیر پر بات کی۔ن لیگ کے کسی لیڈر نے کشمیر پر بات نہیں کی۔پاک فوج کے شہدا کا ذکر جلسے میں ہوناچاہئے تھا، ذکر نہ ہونے پر افسوس ہوا۔یہ ہمار ے شہدا ہیں،جس عقیدے کے ساتھ بلاول بھٹو نے کشمیر کی بات کی،میری مایوسی ختم ہوگئی ورنہ پہلے تو میں مایوس تھا کہ کسی لیڈر نے ذکر تک نہیں کیا۔ نوازشریف کو گیدڑکہنے کی رائے سے اتفاق نہیں کرتا۔عمران خان کو اس طرح کے الفاظ استعمال نہیں کرنے چاہئیں۔نوازشریف بہت جلد بھول جاتے ہیں قمر جاوید باجوہ کو لگایا کس نے تھا۔یہ خود آرمی چیف کو منتخب کرتے ہیں،مشرف تین پوزیشن جونیئر تھا مگر صرف اس لئے منتخب کیا کہ وہ اردو بولنے والے پاکستانیوں میں سے تھا۔انہوں نے سوچا کہ یہ اردو بولنے والا ہے یہ ہمارا کیا بگاڑ لے گا۔اس کا تو حلقہ اثر فوج میں ہوگا ہی نہیں۔اس شخص نے انہیں یہاں تک پہنچا دیا کہ گرفتار کرلیا،فوج اور سویلین کے تعلقات میں سویلین کی برتری ہونی چاہئے ۔









Notice: Undefined variable: aria_req in /home/mymetrom/public_html/wp-content/themes/pinblog-urdu/comments.php on line 83

Notice: Undefined variable: aria_req in /home/mymetrom/public_html/wp-content/themes/pinblog-urdu/comments.php on line 89

اپنا تبصرہ بھیجیں